5 جون کے واقعات ایک نظر میں

Spread the love

واقعات

1953ء امریکی سینیٹ نے چین کی اقوام متحدہ کا رکن بنانے کی درخواست مستردکردی

1944ء جنگ عظیم دوم:ایک ہزار سے زائد امریکی بمبارجہازوں نے پانچ ہزار ٹن وزنی بم جرمنی کے اسلحہ خانے پرگرائے

1942ء امریکہ نے بلغاریہ،ہنگری ارو رومانیہ کے خلاف جنگ کااعلان کیا

1882ء ممبئی میں طوفان اور سیلاب سے ایک لاکھ افراد ہلاک ہوئے

2003ء پاکستان اور بھارت میں گرمی کی شدت پچاس ڈگری سینٹی گریڈ سے تجاوزکرگئی۔

2013ء نواز شریف تیسری بار پاکستان کے وزیر اعظم مقرر

ولادت

1664ء مصطفیٰ ثانی 1695ء سے 1703ء میں اپنے انتقال تک سلطنت عثمانیہ کے تخت پر متمکن رہا۔ وہ 1664ء میں ادرنہ میں پیدا ہوا۔ وہ سلطان محمد رابع کا بیٹا تھا اور ملکہ رابعہ گلنوش سلطان کے بطن سے پیدا ہوا تھا۔ اس کے دور اقتدار کا سب سے افسوسناک واقعہ معاہدہ کارلووٹز تھا جسے سلطنت عثمانیہ کے زوال کا نکتہ آغاز سمجھا جاتا ہے۔ اس معاہدے کے نتیجے میں ہنگری سلطنت کے دائرہ اختیار سے نکل گیا۔ اپنے دور اقتدار کے آخری ایام میں مصطفیٰ نے سلطان کے اختیارات کو بحال کرنے کی کوشش کی جو 17 ویں صدی کے وسط میں اس وقت سے علامتی حیثیت اختیار کرتا جا رہا تھا جب محمد رابع نے اپنے انتظامی اختیارات صدر اعظم کو دے دیے تھے۔ اس کے لیے مصطفیٰ نے وفادار عثمانی گھڑ سواروں “تیمار” کو استعمال کیا لیکن یہ منصوبہ ناکام ہو گیا اور اسے تخت سے ہٹا دیا گیا۔ اس واقعہ کو تاریخ میں واقعہ ادرنہ کے نام سے جانا جاتا ہے۔ اسی سال مصطفیٰ ثانی توپ قاپی محل، استنبول میں انتقال کر گیا۔ مصطفیٰ ثانی نے شادیاں کیں جن میں سے صالحہ سلطان کے بطن سے محمود اول اور شہسوار سلطان کے بطن سے عثمان ثالث پیدا ہوئے۔ ان کا انتقال دسمبر 1703 کو ہوا۔

1862ء الورگلسٹرینڈ سوئیڈن کے ایک سائنس دان تھے انھیں 1911 کا نوبل انعام برائے طب دیا گیا۔ وہ نوبل کمیٹی کے رکن بھی رہے اور کہا جاتا ہے کہ انھوں نے آئن سٹآئن کی نوبل انعام کی نامزدگی کو روکنے کے لیے اس منصب کا استعمال کیا جبکہ کچھ اس بات کو غلط خیال کرتے ہیں۔ ان کا انتقال 28 جولائی 1930 کو ہوا۔

1900ء بابائے پنجابی زبان ڈاکٹر فقیر محمد فقیر پاکستان سے تعلق رکھنے والے پنجابی زبان و ادب کے نامور ادیب، شاعر اور محقق تھے۔ ان کا انتقال 11 ستمبر، 1974ء کو ہوا۔

1900ء ڈینس گبور ہنگری-برطانیہ کے ایک طبیعیات دان تھے جنھیں ہالوگرافک طریقے کو ایجاد کرنے اور اسمیں کی گئی انکے کام پر 1971 میں انھیں نوبل انعام برائے طبیعیات دیا گیا۔ ان کا انتقال8 فروری 1979ء کو ہوا۔

1950 مسعود شریف خان خٹک پاکستان کے شہر کرک میں پیدا ہوئے۔ وہ ایک سیاست دان اور خفیہ نمائندے رہے۔ وہ بینظیر بھٹو کے دور میں پاکستان پیپلز پارٹی کے نائب صدر بھی رہے۔

1882ء سیماب اکبرآبادی، اردو کے نامور اور قادرالکلام شاعر تھے۔ ان کا اصل نام عاشق حسین صدیقی تھا۔ سیماب آگرہ، اتر پردیش کے محلے نائی منڈی،کنکوگلی، املی والے گھر میں پیدا ہوئے۔ ان کے والد، محمّد حسین صدیقی بھی شاعر اور حکیم امیرالدین اتتار اکبرآبادی کے شاگرد تھے اور ٹائمز آف انڈیا پریس میں ملازم تھے۔ ان کا انتقال 31 جنوری 1951ء کو ہوا۔

1971ء مارک واہلبرگ، امریکی اداکار

وفات

1772ء نواب مبارک خان دوم بانی ریاست بہاولپور صادق محمد خان اول کے دوسرے بیٹے اور محمد بہاول خان اول کے بھائی تھے۔ نواب مبارک خان نے ریاست پر 24 سال کامیاب حکمرانی کی۔ ان کی تاریخ پیدائش نہیں مل سکی، اگر کسی کے پاس اس بارے میں معلومات ہوں تو ازراہ کرم مدد کریں

1772ء یوسف بحرانی بہت بڑے شیعہ عالم ہیں جنہوں نے شیعت پر بہت کچھ لکھا اور کتاب الحدائق الناضرة کے مصنف ہیں اور اپنی کتاب کی نسبت سے صاحب حدائق کہلائے اور ان کی شناخت میں بھی اسی نسبت سے ہے۔

1956ء مولانا سید مناظر احسن گیلانی برطانوی ہند کے مشہور عالم دین، مقرر اور مفسر قرآن تھے۔ وہ یکم اکتوبر 1892ء کو پیدا ہوئے۔

2004 رونالڈ ولسن ریگن امریکہ کے سابق صدر اور ہالی ووڈ کے مشہور اداکار تھے۔ امریکی ریاست الینوائے میں پیدا ہوئے۔ کامیاب زندگی کے سفر کا آغاز 1937ء میں ہالی ووڈ سے ایک فلمی اداکار کے طور پر کیا۔ اس دوران انہوں نے کوئی بیس سے زیادہ فلموں میں کام کیا۔ 74-1966 کیلی فورنیا کے گورنر بنے۔ وہ 1981ء سے 1989ء تک امریکہ کے 40 ویں صدر بنے جس دور میں سرد جنگ عروج پر رہی اور سابق سوویت ریاست کے خاتمے کا آغاز ہوا۔ سرد جنگ کے دوران افغان جہاد کو کامیاب بنانے اور کمیونزم کے خاتمے کے لیے بہت زیادہ کوششیں کیں جو بارآور ثابت ہوئیں۔ وہ اب تک امریکہ کے صدور میں سے وہ سب سے طویل عمر پانے والے صدر ہیں۔ لاس اینجلس میں انتقال ہوا۔ وہ 6 فروری 1911 کو پیدا ہوئے۔

تعطیلات و تہوار

ماحولیات کا عالمی دن

2006ء سربیا نے آزادی کا اعلان کیا

2019ء پاکستان میں عید الفطر

Please follow and like us:

Leave a Reply