168

دو ججوں کیخلاف ریفرنسز کی توثیق،وفاقی کابینہ

Spread the love

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) وفاقی کابینہ نے سپریم کورٹ کے دوججز کیخلاف

ریفرنسز کے فیصلے کی توثیق کردی، وزارت قانون و انصاف کو ان ریفرنسز

کے بارے میںبار کونسل کے تحفظات دورکرنے کیلئے اعتماد میں لینا چاہیے،

عدلیہ سے متعلق ریفرنسز کا فیصلہ عدلیہ کرے گی، اس معاملے پر احتجاج کو

آئین و قانون کے مطابق دیکھا جائے گا، ایسسٹس ریکوری یونٹ کی جانب سے

تصدیق کے بعد شکایت وزارت قانون کو بھجوائی گئی، وزارت قانون نے دوبارہ

تصدیق کے بعد سمری کوڈ آف کنڈکٹ کے مطابق صدر مملکت کو بھجوائی

ہے،ور اس معاملہ میں بھی قانون کی عملداری کو پوری طرح ملحوظ خاطر رکھا

جائے گا وفاقی کابینہ نے اس معاملہ پر اپوزیشن اور بار کونسلز کی سیاست

چمکانے کے عمل کی مذمت کی، عدلیہ کی شکایت عدلیہ ہی سن رہی ہے اس میں

عدلیہ پر حملہ کہاں سے آ گیا، وفاقی کابینہ نے 2511 چائنیز کے ویزوں کی مدت

میں ایک سال کی توسیع، جامع بنوریہ کے غیر ملکی طالب علموں کے اوور سٹے

پر عائد جرمانہ معاف کرنے، کیش مینجمنٹ اینڈ ٹریژری سنگل اکائونٹ پالیسی

2019ء، راجہ جواد عباس کو انسداد دہشت گردی اسلام آباد کا جج، عتیق احمد کو

سیکرٹری فیڈرل بورڈ آف انٹرمیڈیٹ اینڈ سیکنڈری ایجوکیشن تعینات کرنے کی

منظوری دیدی ہے، الیکشن کمیشن کی انتخابات 2018بارے سالانہ رپورٹ کے

جائزہ کے لئے چار رکنی وزراتی کمیٹی قائم کردی ارکان میں وفاقی وزراء محمد

اعظم سواتی ،چوہدری فواد حسین، مراد سعید اور ڈاکٹر شیریں مزاری شامل ہیں،

عید کی تعطیلات کے دوران بھی ملک بھر میں کسی مقام پر کوئی لوڈ شیڈنگ

نہیں کی جائے گی۔ کابینہ کو حج اخراجات میں کمی کرتے ہوئے بقایا رقم حجاج

کو واپس کردی جائے گی۔اس امر کا اظہار معاون خصوصی اطلاعات و نشریات

ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کابینہ اجلاس کے بعد بریفنگ دیتے ہوئے کیا۔

وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس پیرکو اسلام آباد

میں ہوا۔ وزیرقانون کی جانب سے کابینہ کواعلیٰ عدلیہ کے دومعزز ججز کے

بارے میں ریفرنس کی تفصیلات سے آگاہ کیا گیا ۔ کابینہ نے اس بات کا اعادہ

کیاکہ موجودہ حکومت قانون کی عملداری پر مکمل یقین رکھتی ہے اور اس

معاملے میں بھی قانون کی عملداری کو پوری طرح ملحوظ خاطر رکھا جائے گا

سپریم جوڈیشل کونسل کے فیصلے سے قبل اس معاملے پر کوئی رائے زنی نہ

کیجائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں