کرونا وائرس 140

افغان امن مذاکرات ،طالبان کو اخراجات کی ادائیگی کرنے کی ٹرمپ کی درخواست مسترد

Spread the love

واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طالبان کو مذاکرات کے

اخراجات دینے کی درخواست قانون سازی سے متعلق کمیٹی نے مسترد

کردی،امریکہ کے عوام کی رقم شدرت پسندوں کے پیٹ کی آگ بجھانے کیلئے ہر

گز نہیں دی جا سکتی۔ بین الاقوامی خبر رساں ادا ر ے کے مطابق امریکی صدر

ڈونلڈ ٹرمپ نے افغان طالبان پر مہربان ہوتے ہوئے نوید سنائی تھی وہ امن

مذاکرات کیلئے آنے جانے اور کھا نے پینے کے اخراجات دینے کے خواہشمند ہیں

لیکن قانون سازی سے متعلق کمیٹی نے درخواست مسترد کردی، امریکی

کانگریس کے ایک عہد یدار نے بتایا ٹرمپ انتظامیہ طالبان کو حالیہ مذاکرات میں

شرکت کرنے پر آنیوالے سفری اخراجات واپس کرنا چاہتی ہے جس میں کھانا پینا،

رہائش اور آمدورفت کے خرچے شامل تھے، امریکی کانگریس کی کمیٹی نے

درخواست کو یہ کہتے ہوئے مسترد کردیا کہ وہ شدت پسندوں کے اخراجات نہیں

اٹھائے گی۔واضح رہے امریکی حکومت اور طالبان کے درمیان اکتوبر سے اب

تک دوحہ میں مذاکرات کے چھ دور ہو ئے ہیں جن کا مقصد امریکہ کو افغانستان

سے محفوظ انخلا فراہم کرنا ہے،یاد رہے گزشتہ ماہ افغان حکومت اور طالبان کے

درمیان مذاکرات آ خری لمحات میں منسوخ ہوگئے تھے، ترجمان افغان صدارتی

محل نے مذاکرات کی منسوخی کی تصدیق کرتے ہوئے کہا تھا مذاکرات افغان وفد

پر قطری حکومت کے اعتراض پر منسوخ ہوئے۔خیال رہے طالبان نے مذاکرات

کیلئے افغان حکومت کے 250رکنی وفد پر تنقید کرتے ہو ئے کہا تھا یہ کانفرنس

ہے شادی کی تقریب یا دعوت نہیں۔



اپنا تبصرہ بھیجیں