112

سانحہ داتا دربار,ایک اور زخمی دم توڑ گیا،شہداء کی تعداد 12 ہو گئی

Spread the love

لاہور ( کرائم رپورٹر) سانحہ داتا دربار کا ایک اور 19 سالہ نوجوان مدثر شہید

ہو گیا۔ اس طرح خود کش دھماکے میں شہادت نوش کرنے والوں کی تعداد 12 ہو

گئی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ 19 سالہ شہید مدثر شہزاد اپنے گھر کا واحد کفیل تھا جو

حیدر آباد سے ہجرت کر کے لاہور میں قیام پذیر ہوئے۔ شہید مدثر شہزاد موہنی

روڈ میں آٹو سپیئر پارٹس کا کاروبار کرتا تھا اور وقوعہ کے روز وہاں سے گزر

رہا تھا یہ بھی بتایا گیا ہے کہ میو ہسپتال لاہور مین زیر علاج 28 زخمیوں میں

سے 19 زخمیوں کو ڈسچارج کر دیا گیا ہے۔ ایک زخمی کو آج کسی وقت

ڈسچارج کر دیا جائے گا جبکہ باقی 6 زخمی میو ہسپتال میں بدستور زیر علاج

ہیں۔ شہید مدثر شہزاد کے بارے میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ وہ اندرون لوہاری گیٹ

کا رہنے والا ہے۔ اپنے اہل خانہ کے ساتھ کرائے کے مکان میں مقیم ہے جبکہ

حکومت کی جانب سے کسی شخصیت نے تاحال مدثر شہزاد کے اہل خانہ سے

رابطہ نہیں کیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں