شجاع آباد میں درندگی کا دوسرا واقعہ، مدرسے کے معلم کی 2 سال تک 12 سالہ طالبہ سے زیادتی

Spread the love

ابتدائی میڈیکل رپورٹ میں بھٹہ مزدور کی بیٹی سے جنسی زیادتی ثابت ہوگئی، پولیس نے ملزم زاہد کو گرفتار کرلیا

میری بیٹی جماعت میں پہلی پوزیشن حاصل کرتی تھی، اس حادثے نے اس کا مستقبل برباد کر دیا،والد

شجاع آباد(صباح نیوز)شجاع آباد میں ایک ماہ کے دوران مدرسے کے معلم کا بچی سے زیادتی کا دوسرا واقعہ

سامنے آگیا۔ ملزم زاہد دو سال تک 12 سالہ بچی کو زیادتی کا نشانہ بناتا رہا، ابتدائی میڈیکل رپورٹ میں جنسی

زیادتی ثابت ہوگئی، درندے کو گرفتار کرلیا گیا۔راجا رام کے علاقے میں واقع مسجد گلزار مدینہ کا معلم زاہد

درندہ بن گیا، بھٹہ مزدور کی 12 سالہ بیٹی مدرسے میں تعلیم حاصل کرنے جاتی تھی، معلم زاہد ڈرا دھمکا کر

2 سال تک زیادتی کا نشانہ بناتا رہا۔بچی کے والد کا کہنا ہے ان کی بیٹی جماعت میں پہلی پوزیشن حاصل کرتی

تھی۔ اس حادثے نے اس کا مستقبل برباد کر دیا۔ متاثرہ خاندان کی درخواست پر پولیس نے کارروائی کی اور

مقدمہ درج کر کے ملزم کو گرفتار کر لیا۔شجاع آباد میں مدرسہ معلم کا طالبہ کے ساتھ زیادتی کا ایک ماہ میں

یہ دوسرا واقعہ ہے۔ اس سے پہلے تھانہ سٹی کی حدود میں بھی ایسا ہی واقعہ پیش آیا تھا۔

Please follow and like us:

Leave a Reply