189

غلط انجکشن سے متاثرہ ننھی نشوا انتقال کرگئی

Spread the love

کراچی(کرائم رپورٹر ) غلط انجکشن لگنے سے متاثرہونے والی معصوم بچی

نشوا انتقال کرگئی،نشوا لیاقت نیشنل ہسپتال کے آئی سی یومیں زیرعلاج تھی،نجی

ہسپتال میں غلط انجکشن لگنے سے نشوا کا 71فیصد دماغ مفلوج ہوا تھا، مقامی

عدالت نے معصوم بچی کو غلط انجکشن لگانے والے ملازم معیز کو جسمانی

ریمانڈ پر پولیس کی تحویل میں دے دیا ۔ تفصیلات کے مطابق کراچی کے سٹیڈیم

روڈ پر واقع نجی ہسپتال میں زیر علاج کمسن بچی نشوی چل بسی جب کہ ہسپتال

کے ترجمان نے بھی اس کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ بچی کا دماغ 71فیصد

مفلوج ہو چکا تھا۔ نشوی کو 6اپریل کو گلستان جوہر کے نجی ہسپتال میں داخل کیا

گیا جہاں غلط انجکشن لگنے سے وہ دماغی طور پر مفلوج ہوگئی تھی۔غلط

انجکشن کا معاملہ سامنے آنے کے بعد بچی کو 13اپریل کو سٹیڈیم روڈ پر واقع

نجی ہسپتال منتقل کیا گیا۔وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ نے نشوا کے انتقال پر

گہرے دکھ کا اظہار کیا، اس سے قبل انہوں نے ہسپتال جا کر نشوا کی عیادت بھی

کی تھی۔ترجمان وزیراعلی ہا ئو س کے مطابق وزیراعلی سندھ کا کہنا ہے کہ

نشواکے بیرون ملک علاج کے لیے پلان بنایا تھا، دعا ہے اللہ پاک بچی کے والدین

کو صبر عطا فرمائے، نشوی کے والدین کے ساتھ انصاف ہوگا۔ بچی نشواکے والد

قیصرعلی نے کہا ہے کہ نشوہ ہارگئی،ظلم جیت گیا، میری بیٹی نے بہت ہمت کی

لیکن وہ ہار گئی، خداراسب مل کرآوازاٹھائیں تاکہ کل کسی اور کی بیٹی نہ جائے۔

پیر کو بچی نشوہ کے والد قیصرعلی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا میری

بیٹی نے بہت ہمت کی لیکن وہ ہار گئی، میری بیٹی چلی گئی ہے۔قیصرعلی نے

اپیل کی خداراسب مل کرآوازاٹھائیں تاکہ کل کسی اور کی بیٹی نہ جائے، کیااس

طرح کے واقعات ہوتے رہیں گے؟ حکام آتے رہیں گے مگرکارروائی نہیں ہوگی،

خبربنتی رہے گی، تصویریں کھنچتی رہیں،ہوناکچھ نہیں، ہم یہاں کسی کوبچانہیں

سکتے۔بعد ازاں نشوہ کے والد نے سوشل میڈیا پر پیغام میں کہا نشوہ ہارگئی،ظلم

جیت گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں