گیارہ بیٹے (Elf Söhne) (کہانی فرانز کافکا) ترجمہ: مقبول ملک

جرمن ادب پڑھنے والے قارئین کے لیے معروف جرمن ادیب کافکا کسی تعارف کے محتاج نہیں ہیں دنیا بھر میں ان کے لکھے گئے ادب کی قدر قیمت آج بھی کم نہیں ہوئی۔ قارئین کے لیے کافکا کے افسانے جو براہ راست جرمن زبان سے ترجمہ کئے گئے ہیں پیش کئے جا رہے ہیں۔ کافکا مزید پڑھیں

کرب (افسانہ) چیخوف

انتون چیخوف پہاڑوں سے گھرے اس گاؤں سے جہاں باکو رہتا تھا بڑے شہر کا فاصلہ پچاس کلو میٹر تھا۔ باکو ایک ترکھان تھا، خراد کی مشین اس کی زندگی کا محور تھی، اسے اپنی خراد اور اپنے ہنر پر بڑا فخر تھا۔ وہ اس خراد پر لکڑی کی خوبصورت چیزیں ایسی مہارت سے بناتا مزید پڑھیں

آخری جلسہ (افسانہ) آندرے گروشینکو (روس)

یکم مئی کو ستار طاہر مرحوم کا یوم پیدائش تھا تو میں نے ان کے لیے چند سطور تو تحریر کیں مگر میرے پاس کوئی ترجمہ کمپوز شدہ نہ تھا جو میں فوری طور پر شائع کر سکتا۔ ستار طاہر کے صاحبزادے عدیل ستار عرصہ دراز تک میرے رفیق کار رہے ان سے رابطہ بھی مزید پڑھیں

چور (افسانہ) جے بی بیلے

جے۔ بی۔ بیلے (برطانیہ) ورنن کے لیے اب چوری کرنے کے سوا کوئی چارۂ کار نہ تھا۔ اس نے اپنے دل کو سمجھایا کہ مجھ میں اس کے سوا اور کسی کام کی صلاحیت نہیں۔ اس نے سوچا کہ اگر میں نے غیر معمولی جرأت کا مظاہرہ نہ کیا تو ساری عمر کلرکی کا دھندا مزید پڑھیں

ناکردہ گناہ(افسانہ) ٹالسٹائی

لیو ٹالسٹائی 28 اگست 1828 – 20 نومبر 1910 عرصہ دراز پہلے ولادی میر آکسینوف نامی ایک نوجوان تاجر رہتا تھا۔ وہ دو عدد دکانوں اور ایک مکان کا مالک تھا۔ اس کا رنگ سرخی مائل سفید تھا اور بال گھنگھریالے۔ ہنس مکھ ہونے کے ساتھ ساتھ وہ خوش گلو بھی تھا۔ اوائل جوانی میں مزید پڑھیں

فرانسیسی قیدی (افسانہ) صادق ہدایت

17 فروری 1903ء – 4 اپریل 1951ء ایرانی مصنف، افسانہ نگار، مترجم اور دانشور ہیں جنہوں نے ایرانی ادب میں جدید تکنیک متعارف کرائی۔ انہیں بلاشبہ بیسویں صدی کے عظیم مصنفین میں شمار کیا جاتا ہے۔ میرا قیام بیزانسن میں تھا۔ ایک دن میں اپنے کمرے میں داخل ہوا تو دیکھا کہ میرا ملازم ملگجا مزید پڑھیں

پشاور ایکسپریس (افسانہ) کرشن چندر

دیپک بدکی صاحب نے اپنے مضمون میں پشاور ایکسپریس کاخاص تذکرہ کیا اس لیے کرشن چندر کا یہ افسانہ پیش خدمت ہے جب میں پشاور سے چلی تو میں نے چھکا چھک اطمینان کا سانس لیا۔ میرے ڈبوں میں زیادہ تر ہندو لوگ بیٹھے ہوئے تھے۔ یہ لوگ پشاور سے ہوئی مردان سے، کوہاٹ سے، مزید پڑھیں

بے روز گاری کا جرم (افسانہ)

گائے ڈی موپساں رینڈل ایک ماہ سے زیادہ کام کی تلاش میں اِدھر اُدھر پھرتا رہا۔ جب اسے اپنے وطن ویلی ایوری مین، جو صوبے لاماشے کا ایک گاؤں تھا، کہیں کام نہ مل سکا تو وہ اپنا گھر چھوڑنے پر مجبور ہوگیا تاکہ کہیں اور ہاتھ پیر مارے۔وہ ستائیس سال کا بڑھئی تھا جو مزید پڑھیں