9 اپریل کے واقعات ایک نظر میں

Spread the love

واقعات

1241ء جنگ لائیگنٹز میں منگولوں نے پولش اورجرمن افواج کو ہرا دیا۔

1667ء پہلی عوامی آرٹ کی نمائش فرانس کے دار الحکومت پیرس میں ہوئی

1918ء لٹویا نے آزادی کا اعلان کیا

1940ء دوسری جنگ عظیم میںجرمنی نے ڈنمارک اور ناروے کا پرچمناروے پر حملہ کر دیا۔

1945ء امریکی ایٹمی انرجی کمیشن کا قیام

1965ء پاکستان اور بھارت کے درمیان جنگ کا آغازہوا

1967ء بوئنگ 737 کی پہلی پرواز

1972ء روس اور عراق نے دوستی کے معاہدے پر دستخط کیے

1973ء ہالینڈنے ویتنام کو تسلیم کیا

1991ء – جارجیا نے روس سے اپنی آزادی کا اعلان کر دیا۔

2003ء عراق میں باتھ حکومت کا اختتام ہو گیا۔

2009ء بلوچستان کے ضلع کیچ کے علاقے تربت میں تین بلوچ رہنماؤں بلوچ نیشنل موومنٹ کے صدر غلام محمد بلوچ کو دو ساتھیوں سمیت قتل کیا گیا۔

8 اپریل کے واقعات پڑھنے کے لیے یہاں کلک کریں

ولادت

1339ء امیر تیمور جو (تمر لین)تیمور لنگ کے نام سے بھی مشہور تھا تیموری سلطنت کا بانی اور ایک تاریخ عالم کا ایک عظیم جنگجو حکمران تھا۔ اس کا انتقال 19 فروری 1405ء میں ہوا۔

1927ء منیر نیازی کا شمار اردو اور پنجابی کے اہم تر شاعروں میں ہوتا ہے۔ ان کی ابتدائی شاعری قیام ساہیوال کے ایام کی یادگار ہے۔ منٹگمری (اب ساہیوال) میں انھوں نے ’’سات رنگ ‘‘کے نام سے ایک ادبی رسالہ بھی جاری کیا۔ لاہور منتقلی کے بعد فلمی گانے بھی لکھے۔ منیر نیازی کی غزل میں حیرت اور مستی کی ملی جلی کیفیات نظر آتی ہیں۔ ان کے ہاں ماضی کے گمشدہ منظر اور رشتوں کے انحراف کا دکھ نمایاں ہے۔ منیر نیازی کی شاعری کے بارے میں ڈاکٹر محمد افتخارشفیع اپنے ایک مضمون میں لکھتے ہیں۔ ’’منیر نیازی بیسویں صدی کی اردو شاعری کی اہم ترین آواز ہیں۔ ان کا شعری لب ولہجہ اپنی انفرادیت کے ساتھ ہمیشہ انھیں نمایاں مقام عطا کرے گا‘‘۔ منیر نیازی 26 دسمبر 2006 کو اس جہانِ فانی سے کوچ کر گئے اور ماڈل ٹاون کے قبرستان میں دفن ہیں۔

1945ء عبد القادر بلوچبلوچستان سے تعلق رکھنے والے پاک فوج کے سابق جرنیل اور مسلم لیگ ن کے معروف سیاست دان ہیں۔ وہ صوبے کے گورنر بھی رہے ہیں

1955ء ایک پاکستانی اداکارہ جو زیادہ تر ٹیلی ویژن ڈراموں میں کام کرتی ہیں۔ ان کے شوہر عثمان پیرزادہ بھی ایک اداکار ہیں۔ انہوں نے فلم میں معاون اداکارہ کے طور پر اپنے کردار بہت خوبی سے نبھائے۔

1959ء ڈاکٹر محمد فاروق ستار پیروانی کراچی، سندھ، پاکستان کے ایک سیاست دان ہیں۔ ان کا تعلق سیاسی جماعت ایم کیو ایم (پاکستان گروپ) سے تھا جس کے وہ چیئرمین بھی رہ چکے ہیں۔

1835ء لیوپولڈ دوم، بیلجیم کے بادشاہ

وفات

491ء زینو، قسطنطین بادشاہ

1024ء پوپ بینیڈکٹ ہشتم

1626ء فرانسز بیکن، برطانوی فلسفی

1959ء فرینک لائڈ رائٹ، فن تعمیر سے متعلق

1980ء محمد باقر الصدر، مورخہ یکم مارچ 1935 کو کاظمیہ میں پیدا ہوئے جبکہ انکی وفات 9 اپریل 1980 کو ہوئی، ایک عراقی شیعہ عالم، فلسفی اور حزب اسلامی دعوت کے بانی تھے۔ وہ مقتدی الصدر کے سسر اور محمد صادق الصدر اور موسیٰ الصدر کے چچازاد تھے۔ محمد باقرالصدر کے والد محمد حیدرالصدرایک نہائت نیک اور معروف شیعہ عالم دین تھے۔ انکا سلسلہ ساتویں شیعہ امام موسیٰ الکاظم سے ملتاہے۔ صدام حسین کے دور حکومت میں محمد باقرالصدر کو پھانسی دے دی گئی تھی

تعطیلات و تہوار

بہائی مذہب کا تہوار جلال

Please follow and like us:

اپنا تبصرہ بھیجیں