بھارتی انتخابات میں فوج کا نام استعمال کرنے پر 156 سابق افسروں کا احتجاج

Spread the love

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک)بھارتی انتخابات میں فوج کے استعمال پر 156سابق

اعلی فوجی افسر بھی چیخ اٹھے۔تفصیلات کے مطابق بھارتی انتخابات میں فوج

کے استعمال کے بعد سابق بھارتی فوجی افسر بھی چیخ اٹھے،صدر رام ناتھ کو

156سابق فوجیوں نے خط لکھ ڈالا،خط میں کہا گیا کہ وزیراعظم نریندر مودی

سیاسی مفاد کیلئے فوج کو ڈھال بنا رہے ہیں۔بحری ،بری اور فضائی فوج کے

سابق سربراہوں نے بھی خط میں تشویش کا اظہار کیاکہا بھارتی فوج مودی کی

فوج نہیں ،اس لئے ذاتی مفادات کیلئے استعمال نہ کیا جائے۔خط میں انتخابی مہم

کے دوران ابھی نندن کی تصویر کے استعمال پر بھی اعتراض کیا گیا۔سابق

فوجیوں کے خط پر کانگریس کا ردعمل بھی سامنے آگیا،ٹویٹ کیا کہ مودی شاید

فوج کو ووٹ کیلئے استعمال کرناچاہتے ہیں لیکن یہ واضح ہے کہ فوج بھارت کے

ساتھ ہے۔بھارت میں لوک سبھاکے انتخابات کے دوسرے مرحلے میں 13ریاستوں

کی 97لوک سبھا نشستوں پر پولنگ 18اپریل کو ہوگی۔ لوک سبھا کے انتخابات

میں 543 نشستوں کیلئے 7 مراحل میں90 کروڑ ووٹر حق رائے دہی استعمال

کریں گے ۔انتخابات کے حتمی نتائج کا اعلان الیکشن کمیشن کی طرف سے 23

مئی کو سنایا جائے گا۔



Please follow and like us:

اپنا تبصرہ بھیجیں