سعودی ولی عہد کے دورہ پاکستان میں آنے والے اخراجات کی تفصیلات طلب

Spread the love

سینیٹ قائمہ کمیٹی کابینہ سیکریٹریٹ کا اجلاس 21 مارچ کو ہوگا،اجلاس کا ایجنڈا جاری

وزیر اعظم ہاوس کی گاڑیوں کی حالیہ نیلامی کی تفصیلات بھی طلب

اسلام آباد(مہتاب پیرزادہ)سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے کابینہ سیکریٹریٹ نے اپنے21مارچ کے اجلاس میں

سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کے دورہ پاکستان کے دوران ہونے والے اخراجات کی تفصیلات طلب کرلیں۔

کمیٹی کے سیکریٹری کی جانب سے اجلاس کے جاری ایجنڈے میں بتایا گیا کہ اجلاس میں سعودی ولی عہد

کے پروٹوکول کے لیے استعمال ہونے والی گاڑیوں کی تفصیلات پر بریفنگ بھی شامل ہوں گی۔ اس کے علاوہ

اجلاس میں 18 ویں ترمیم کے بعد پاکستان ٹورازم ڈیولپمنٹ کارپوریشن کے کام، حیثیت، اثاثے، اخراجات اور

منافع سے متعلق بھی تبادلہ خیال کیا جائے گا اور اس پر بھی بریفنگ لی جائے گی۔ ایجنڈا کے مطابق اجلاس

میں سینیٹرز کی جانب سے نشاندہی کی گئی پاکستان میں گزشتہ 6 برسوں (2018-2012) کی ترقیاتی

اسکیمیوں پر بھی بات چیت ہوگی اور ان کی موجودہ حیثیت پر تفصیلات طلب کی جائیں گی۔ خیال رہے کہ 17

فروری کو سعودی ولی عہد محمد بن سلمان اسلام آباد کے نورخان ایئربیس پر پہنچے تھے جبکہ اس دوران

جڑواں شہروں اسلام آباد اور راولپنڈی میں سیکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے تھے۔ محمد بن

سلمان کا بطور سعودی ولی عہد یہ پہلا دورہ پاکستان تھا اور اس دوران سرمایہ کاری کے تعاون کے لیے

مختلف مفاہمت کی یادداشت پر دستخط ہوئے تھے جبکہ سعودی مہمان کے اعزاز میں تقاریب کا اہتمام بھی کیا

گیا تھا، علاوہ ازیں سینیٹ کمیٹی نے 21 مارچ کو ہونے والے اجلاس میں وزیر اعظم ہاوس کی گاڑیوں کی

حالیہ نیلامی کی تفصیلات بھی طلب کی ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں