امریکہ کاایک بار پھر پاکستان پر دہشتگردوں کی مددکاالزام

Spread the love

واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک)امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ پاکستان سے

بہتر تعلقات چاہتے ہیں تاہم وہ دہشت گردوں کو پناہ دیتے ہیں اور دشمنوں کی

رکھوالی کرتے ہیں، یہ کام ہم نہیں کر سکتے اس لیے میں پاکستان کے نئے

حکمرانوں سے جلد ملاقات کرنے کا منتظر ہوں اور ہم ایسا مستقبل قریب میں

کریں گے۔ اوہایو روانگی سے قبل وائٹ ہائوس میں صحافیوں کیساتھ اور اجلاس

میں گفتگو کرتے ہوئے امریکی صدر نے پاکستان کو دئیے جانے والے کولیشن

سپورٹ فنڈ روکے جانے کا بتاتے ہوئے کہا کہ جب ہم پاکستان کو 1.3 ارب ڈالر

دیتے تھے تو میں نے ہی اسے روکا تھا جبکہ کئی لوگوں کو یہ معلوم نہیں کیونکہ

وہ ہم سے مخلص نہیں،انہوں نے کہا کہ پاکستان ہمارے ساتھ ٹھیک طریقے سے

نہیں چل رہا تھا اس لیے پاکستان کو 1.3 ارب ڈالر دینا بند کر دیئے اور دیگر

ایسے ملکوں کی امداد بھی بند کررہے ہیں جو ہمیں کچھ نہیں دیتے۔انہوں نے کہا

ہے کہ پاکستان اور امریکہ کے درمیان تعلقات بہت اچھے ہیں اور وہ جلد پاکستان

کی قیادت کے ساتھ ملاقات کریں گے۔ امریکی صدر نے کہا کہ بھارت سمیت

روس اور پاکستان افغانستان میں طالبان سے لڑنے کیلئے کلیدی کردار ادا کریں۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ نریندر مودی نے افغانستان میں لائبریری بنا کر بار بار

جتایا جبکہ بھارت نے جتنے پیسوں میں لائبریری بنائی امریکہ اتنے پیسے

افغانستان میں 5 گھنٹے میں خرچ کر دیتا ہے۔

Please follow and like us:

اپنا تبصرہ بھیجیں