والدین نے بچوں کو نظر انداز کر کے اساتذہ اور ملازمین کے سپرد کر دیا ہے۔ شہر یار آفریدی

Spread the love

وزیرمملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی نے کہا ہے کہ اسلام آباد اور پاکستان کو منشیات سے پاک کیا جائے گا، ہائبرڈ ففتھ جنریشن وار کے ذریعے نوجوان نسل کو تباہ کیا جارہا ہے، پاکستانی قوم نے لازوال قربانیاں دے کر اپنا تحفظ کیا ہے، مضبوط اور پرانے خاندانی نظام میں بچوں کی بہترین تربیت ہوتی تھی، زندگی کی دوڑ میں والدین نے بچوں کو نظر انداز کردیا، ہمیں اپنی معاشرتی اقدار کو بحال کرنا ہوگا۔جمعرات کو ہلال احمر پاکستان میں اسلام آباد کی ضلعی انتظامیہ کے زیر اہتمام ”منشیات سے پاک اسلام آباد“ کے موضوع پرسیمینار سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ والدین آج اپنے بچوں کے حوالے سے اس اضطراب میں مبتلا ہیں ہمارا سماجی ڈھانچہ تبدیل ہو چکا ہے۔ایک دوسرے کے لئے احساس اور درد پہلے جیسا نہیں رہا، زندگی کی دوڑ اور خواہشات کی تکمیل میں ہم اتنے آگے نکل گئے ہیں کہ اپنی انفرادی اور اجتماعی ذمہ داریاں بھول چکے ہیں۔پہلے کسی گھر میں فوتگی ہوتی تھی تو کئی کئی دن تک دور دور تک سوگ کا سماں ہوتا تھا ،ایک دوسرے کے لئے دل میں درد اور تکلیف تھی، اب معاشرے میں پہلے جیسا جذبہ باقی نہیں رہا۔انہوں نے کہا کہ زندگی کی دوڑ میں والدین نے بچوں کو نظر انداز کردیا ہے اور بچوں کو اساتذہ اور ملازمین کے سپرد کردیا ہے۔ پہلے بچے اپنے والدین اور مشترکہ خاندانی نظام کے زیر سایہ رہتے تھے ، بچوں کو منشیات پر لگایا اور پھر انہیں بلیک میل کیا جاتا ہے، والدین بچوں کو موبائل فون ،ٹیبلٹ اور لیپ ٹاپ نہ دیں اور ان کی سرگرمیوں پر نظر رکھیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں