ساہیوال جیسے واقعات پوری دنیا میں ہوتے ہیں : گورنر پنجاب چوہدری سرور

Spread the love

انہوں نے کہا کہ ساہیوال میں جو معصوم جانیں ضائع ہوئیں،پوری قوم اس خاندان کے غم میں برابر شریک ہے۔

چوہدری سرور میر پور میں میڈیا سے گفتگو کررہے ہیں۔

گورنر پنجاب چوہدری سرور کا کہنا ہے کہ ساہیوال جیسے واقعات دنیا بھر میں ہوتے ہیں، ان کی تفتیش کے بعد ملزمان کو سزا دینی چاہیے۔

میر پور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے گورنر پنجاب نے کہا کہ ساہیوال میں گذشتہ روز واقعے کی ابتدائی تحقیقات جاری ہیں، حکومت نے مشترکہ تحقیقاتی کمیٹی (جے آئی ٹی) بنادی ہے جو 72 گھنٹے میں اپنی رپورٹ پیش کرے گی۔

چوہدری سرور نے بتایا کہ جے آئی ٹی میں آئی ایس آئی، ایم آئی، پولیس اور تمام سینئر افسران ہیں جن کی قابلیت پر شک نہیں کیا جاسکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ساہیوال میں جو معصوم جانیں ضائع ہوئیں،پوری قوم اس خاندان کے غم میں برابر شریک ہے۔

گورنر پنجاب نے مزید کہا کہ ا س واقعے سے ہم سب کو صدمہ پہنچا ہے،ہم سب پریشان ہیں اور اس کے ذمہ داران کو قانون کے کٹہرے میں لایا جائے گا۔

چوہدری سرور نے کہا کہ جب بھی کوئی حادثہ ہو یہ کہا جاتا ہے کہ کیا یہ ریاست مدینہ ہے؟ کیا یہ نیا پاکستان ہے، ایسے واقعات ساری دنیا میں ہوتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایسے واقعات کی تفتیش ہونی چاہیے تاکہ ذمہ داران کو سزا دی جاسکے۔

ان کا کہنا تھا کہ پنجاب میں رینجرز اور فوج کو نہیں بلایا گیا ،اسی انسداد دہشت گردی (سی ٹی ڈی )نے گذشتہ 4 سالوں میں دہشت گردوں کا قلع قمع کیا جس پر ان کی تعریف کی جانی چاہیے۔

چوہدری سرور نے کہا کہ کوئی واقعہ ہو ہم ایک چیز یا ایک شخص کی مذمت کرنے کے بجائے اداروں کو ملامت کرتے ہیں ، دہشت گردی ایک لعنت ہے جس سے ملک کو مالی طور پر نقصان ہوا اور عالمی منظرنامے میں بھی پاکستان کا نام خراب ہوا۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمارے ملک میں لوگ خود محفوظ تصور نہیں کرتے تھے لیکن افواج پاکستان، سی ٹی ڈی، پولیس اور سیاسی جماعتوں کے تعاون سے پوری قوم نے ایک ہو کر دہشت گردی میں کمی کے لیے بہت قربانیاں دی ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں