فیصل آباد،علی حیدرگیلانی کے اغوا میں ملوث 2 دہشتگرد ہلاک،3 گرفتارخودکش جیکٹس اسلحہ، دستی بم برآمد

Spread the love

سی ٹی ڈی نے فیصل آباد اور بہاولپور میں دہشتگردوں کے خلاف مختلف کارروائیوں میں 2 دہشتگرد ہلاک اور 3 گرفتار کر لئے۔ فیصل آباد میں ایکشن کے دوران 2 دہشت گردوں کو ہلاک کر دیا گیا۔ ہلاک دہشت گرد سابق وزیراعظم یوسف گیلانی کے بیٹے علی حیدر گیلانی کے اغوا سمیت وارداتوں میں ملوث تھے۔ دوسری طرف انسداد دہشت گردی فورس نے بہاولپور میں خفیہ کارروائی کے دوران کالعدم تنظیم کے 3 دہشت گرد گرفتار کر لئے۔ دہشت گردوں سے خودکش جیکٹس، اسلحہ، ہینڈ گرنیڈ سمیت دیگر سامان بھی برآمد ہوا۔قانون نافذ کرنے والے ادارے چوکس، دہشت گردوں کے گرد گھیرا تنگ کر دیا۔ سی ٹی ڈی نے خفیہ اطلاع پر فیصل آباد میں کارروائی کی، ذرائع کے مطابق دہشت گرد کرائے کے گھر میں مقیم تھے، محاصرہ کئے جانے پر دہشت گردوں نے فائرنگ کر دی، جوابی فائرنگ میں 2 دہشت گرد مارے گئے۔ہلاک ہونیوالے دہشت گردوں کی شناخت عدیل حفیظ اور عثمان ہارون کے نام سے ہوئی۔ دہشتگردوں نے سیکیورٹی اداروں پر حملے کی منصوبہ بندی بھی کررکھی تھی۔ ہلاک دہشت گرد ملتان میں حساس ادارے کے افسران کے قتل اورمتعدداہم شخصیات کے اغوا کے منصوبے اور امریکی شہری وارن وائن سٹائن، سابق وزیراعظم یوسف گیلانی کے بیٹے علی حیدر گیلانی کے اغوا میں بھی ملوث تھے۔ دہشت گردوں سے خودکش جیکٹس، اسلحہ، ہینڈ گرنیڈ سمیت دیگر سامان بھی برآمد ہوا۔دوسری طرف انسداد دہشت گردی فورس نے بہاولپور میں خفیہ کارروائی کے دوران کالعدم تنظیم کے 3 دہشت گرد گرفتار کر لئے۔ سی ٹی ڈی حکام کے مطابق گرفتار دہشت گردوں میں سمیع اللہ، محمد شیر اور شاہ ولی شامل ہیں جن کا تعلق کالعدم تنظیم سے ہے۔تینوں دہشت گردوں کو خفیہ اطلاع پر جھنگی والہ سے گرفتار کیا گیا۔ گرفتار دہشت گردوں کے قبضے سے بارودی مواد، بال بیرنگ، ڈیٹونیٹرز سمیت دیگر سامان برآمد کر لیا گیا۔ دوسری طرف آئی این پی کے مطابق سکیورٹی فورسز نے بلوچستان میں آپریشن ردالفساد کے تحت کارروائی کرتے ہوئے افغان دہشتگرد گرفتار کر کے قبضے سے خودکش جیکٹس، بارودی مواد کے علاوہ مواصلاتی آلات بھی برآمد کر لئے اور دہشتگردی کا منصوبہ ناکام بنا دیا۔ پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر )کے مطابق آپریشن ردالفساد ملک بھر میں کامیابی سے جاری ہے، سیکورٹی فورسز نے بلوچستان سے افغان باشندہ گرفتار کر لیا۔ ایف سی بلوچستان کو چمن کے علاقے میں دہشتگردوں کی پناہ گاہ کی اطلاع ملی جہاں فوری ایکشن کے نتیجے میں دھماکہ خیز مواد، واردات کیلئے تیار کی گئی خودکش جیکٹس اور مواصلاتی آلات ملے جبکہ ایک شخص کو حراست میں لے لیا گیا جس کی افغان شہری کے طور پر شناخت ہوئی۔